Home / World / کراچی سے مولانا فضل الرحمان کی قیادت میں جے یو آئی کے آزادی مارچ کا آغاز

کراچی سے مولانا فضل الرحمان کی قیادت میں جے یو آئی کے آزادی مارچ کا آغاز

وزیر اعظم عمران خان کے استعفے اور ملک میں نئے انتخابات کے مطالبے کے لیے مولانا فضل الرحمان کی سربراہی میں اپوزیشن کے آزادی مارچ کا آغاز  ہوگیا۔

 آزادی مارچ  کراچی ٹول پلازہ سے شروع ہو ا جس میں جمعیت علمائے اسلام (ف) سمیت دیگر اپوزیشن جماعتوں کے کارکنان نے بڑی تعداد میں شرکت کی، مارچ کے آغاز پر شرکاء پر گل پاشی بھی کی گئی۔

اس موقع پر  مولانا فضل الرحمان  سمیت مسلم لیگ (ن)  رہنما محمد زبیر ، رہنما پیپلز پارٹی رضا ربانی  نے افتتاحی جلسے سے خطاب کیا۔

افتتاحی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے  یوم سیاہ  کے موقع پر کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کی اور کہا کہ پاکستانی قوم کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے مظالم پرخاموش نہیں رہ سکتی۔

ان کا کہنا تھا کہ کشمیریوں سے اظہاریکجہتی دنیا کوپیغام ہےکہ پاکستانی قوم ایک پیج پر ہے اور ساتھ ہی بھارت کی ظالمانہ حکومت کو بھی پیغام مل رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ بھارت کی فوج نے 27 اکتوبر کر کشمیر میں داخل ہوکر قبضہ کرلیا تھا جب کہ کرفیو کے نفاذ سے بھارت کشمیر میں شخصی زندگی میں تنگی کا مجرم ہے۔

خطاب کے دوران مولانا فضل الرحمان  نے مزید کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالی عام زندگی کو اجیرن بنا رہی ہے لہذا عالمی برادری او آئی سی اور عالمی تنظیمیں کشمیر میں بھارتی مظالم کا نوٹس لیں۔

پیپلز پارٹی رہنما رضا ربانی نے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وہ پارٹی  چیئرمین بلاول بھٹو کی ہدایت پر یہاں موجود ہیں، جہاں جہاں سے  آزادی مارچ گزرے گا، پیپلز پارٹی کے رہنما اور کارکنان استقبال کریں گے۔

آزادی مارچ کے لیے خصوصی طور پر کنٹینر تیار کیا گیا ہے جس میں سونے، باتھ روم اور دیگر سہولیات موجود ہیں جبکہ کنٹینرز کی چھت پر قائدین کے خطاب کے لیے بھی جگہ بنائی گئی ہے۔

About Editor Tehqiq Nama

Check Also

طوفان کیار کی شدت: کراچی میں سمندر کا پانی سڑک پر آگیا

کراچی: سمندری طوفان کیار  کی شدت سے کئی ساحلی بستیاں زیر آب آگئیں۔ طاقتور ترین …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے